Home / کالم / انوکھا انٹرویو# 5

انوکھا انٹرویو# 5

الحمد للہ علی سابغ نعم اللہ۔۔۔
نیت اچھی تو اللہ راستہ بنا دیتا ہے۔🙃🙃 ایک رسالہ بند ہوا تو اللہ نے دوسرے میں جگہ دے دی الحَمْدُ ِلله۔۔۔
اللہ اس سلسلے کو جاری رکھنے کی توفیق دے اور امت محمدﷺ کو اس سے فاٸدہ پہنچے۔۔ آمین
انو منو کو کیا آپ لوگ بھول گئے تھے؟
اب مہینے میں ایک بار ملاقات کرنے آئیں گی آپ سے ” انو منو”

تحریر: انعم توصیف، کراچی
انوکھا انٹرویو# 5

اَلسَلامُ عَلَيْكُم وَرَحْمَةُ اَللهِ وَبَرَكاتُهُ‎! آپ کی میزبان انو منو آج لے کر آٸی ہے ایک ایسا انٹرویو جس کو پڑھنے کے بعد آپ کے علم میں ہوگا خوب اضافہ ان شاء اللہ۔ ہر بار کی طرح اس بار بھی ہمارے ساتھ ہیں ایک ایسے مہمان جن کا انٹرویو ہوگا ایک دم انوکھا اور منفرد۔۔۔

انو منو: اَلسَلامُ عَلَيْكُم وَرَحْمَةُ اَللهِ وَبَرَكاتُهُ‎
مہمان: وَعَلَيْكُم السَّلَام وَرَحْمَةُ اَللهِ وَبَرَكاتُهُ‎

انو منو: آپ اپنا نام ہمارے ساتھیوں کو بتاٸیے۔
مہمان: جی میرا نام ”زکوة“ ہے۔

انو منو: آپ کے نام کے معنی کیا ہیں؟
مہمان: میرے نام کے معنی بڑھنے اور پاک ہونے کے ہیں۔

انو منو: آپ کے نام کے معنی تو ہم جان چکے۔ اب آپ ہمیں یہ بتاٸیے کہ آپ کب مسلمانوں پہ فرض کی گٸیں؟
مہمان: مسلمانوں پر مجھے فرض تو ہجرت سے پہلے یعنی مکہ مکرمہ میں ہی کردیا گیا تھا لیکن سن 2 ہجری میں مجھے کس کو دیا جاٸے اور کتنا دیا جاٸے یہ احکامات نازل ہوٸے۔ اس کے بعد سے ہی لوگوں نے مجھے ادا کرنا شروع کیا۔

انو منو: کیا قرآن پاک میں آپ کا ذکر موجود ہے؟
مہمان: جی بالکل! قرآن پاک میں سورة البقرہ میں اللہ پاک فرماتے ہیں:
”واقیمو الصلوة واتوا الزکوة“
”اور نماز قاٸم کرو اور زکوة ادا کرو۔“

انو منو: قرآن پاک میں کتنے مقامات پہ آپ کا ذکر آیا ہے۔
مہمان: قرآن پاک میں نماز جیسی اہم ترین عبادت کے ساتھ میرا ذکر تقریبا 80 مقامات پر آیا ہے۔ اس کے علاوہ تنہا میرا ذکر اور بھی جگہ قرآن پاک موجود ہے۔

انو منو: آپ کے معنی بڑھنا اور پاک ہونا کے ہیں۔ اس کا کیا مطلب ہے؟
مہمان: اس کا مطلب یہ ہے مجھے جب آپ ادا کریں گے تو اللہ پاک کبھی بھی ایسا نہیں کرے گا کہ آپ کا مال کم ہوجاٸے بلکہ مجھے ادا کرنے سے آپ کی دولت میں اضافہ ہوگا اور جس طرح نہانے سے آپ پاک صاف ہوجاتے ہیں اس ہی طرح مجھے ادا کرنے سے آپ کا مال پاک ہوجاتا ہے۔

انو منور: آپ کو ادا کرنا کس پر فرض ہے؟
مہمان: ہر اس عاقل، بالغ مسلمان پر مجھے ادا کرنا فرض ہے کہ جس کے پاس ساڑھے 52 تولہ چاندی یا ساڑھے سات تولہ سونا ہو۔ یا پھر اتنے پیسے ہو جس سے ساڑھے 52 تولہ چاندی خریدی جاسکتی ہو۔

انو منو: آپ کو کب ادا کیا جاتا ہے؟
مہمان: سال میں ایک بار مجھے ادا کیا جاتا ہے۔ جتنی دولت میں نے بتاٸی ہے اتنی دولت جس کے پاس ہو اور سال بھر اس کے پاس رہے۔ تب اس پر مجھے دینا فرض ہے۔

انو منو: واہ بھٸی یہ تو بہت آسان ہے۔ سال میں بس ایک مرتبہ دینا ہے۔ وہ بھی تب جب پورا سال گزرجاٸے۔ ہمیں یہ بتاٸیے کہ ہمارے مال میں آپ کا یعنی زکوة کا کتنا حصہ رکھا گیا ہے؟

مہمان: یہ سوال بہت اہم ہے۔ جتنا مال ہو اس کا چوتھاٸی حصہ دینا واجب ہے۔ چوتھاٸی حصہ مطلب جیسے سو روپے میں ڈھاٸی روپے۔

انو منو: بس اتنے سے پیسے دینے سے ہمارا مال پاک ہوجاٸے گا۔ سبحان اللہ۔ آپ کو دیا کس کو جاٸے؟
مہمان: غریبوں، مسکینوں، فقیروں اور ضرورت مندوں کو مجھے دیا جاٸے تاکہ وہ اپنی ضروریات پوری کرسکیں۔

انو منو: آپ اپنے بارے میں کوٸی حدیث ہمارے ننھے دوستوں کو سناٸیں۔
مہمان: رسول اکرم ﷺ نے ارشاد فرمایا:
”جس کو اللہ نے مال دیا اور اس نے زکوة ادا نہ کی تو قیامت کے دن اس کا مال بڑا زہریلا گنجا سانپ بن کر اس کی گردن میں لپٹ جاٸے گا، پھر اس کے دونوں جبڑے نوچے گا اور کہے گا میں تیرا مال ہوں، میں ہی تیرا خزانہ ہوں۔“ (بخاری و مسلم)

انو منو: اللہ پاک ہم سب کو اس عذاب سے محفوظ رکھے۔ ہم سب اپنے بڑوں سے کہیں گے کہ وہ لازمی زکوة دیں۔
مہمان: جی آپ لوگ خود بھی میری اہمیت کو سمجھیے اور سب کو سمجھاٸیٕے۔

انو منو: آپ ہمارے قارٸین کو کوٸی پیغام دینا چاہیں گی؟
مہمان: مجھے ادا کرنے سے اللہ بھی راضی ہوگا، غریبوں کی مدد بھی ہوگی اور آخرت میں اللہ پاک مجھے ادا کرنے کی وجہ سے انعامات سے بھی نوازے گا ان شاء اللہ۔

انو منو: جزاک اللہ خیرا کثیرا آپ نے ہمیں اپنے بارے اتنا کچھ بتایا۔ اور بہت آسان طریقے سے سمجھایا۔
مہمان: آمین۔ اب مجھے اجازت دیجیے۔ اللہ آپ سب کو مجھے ادا کرنے کی توفیق دے۔آمین

یہ تھیں ہماری آج کی مہمان۔۔ امید ہے ان کا انٹرویو پڑھ کر آپ کو بہت سی اہم باتیں پتا چلی ہوں گی۔ ان شاء اللہ پھر آپ کی خدمت میں حاضر ہوں گی ایک اور انوکھے انٹرویو کے ساتھ۔ تب تک کے لیے مجھے یعنی اپنی میزبان ”انو منو“ کو اجازت دیجیے۔ اپنی قیمتی دعاٶں میں مجھے یاد رکھیے۔ دعا کیجیے، دعا دیجیے اور دعا لیجیے۔ اللہ حافظ

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے