Home / کالم / انوکھا انٹرویو # 2 کا حصہ اول ۔۔۔۔

انوکھا انٹرویو # 2 کا حصہ اول ۔۔۔۔

الحمد للہ علی سابغ نعم اللہ💖💖
انوکھا انٹرویو # 2 کا حصہ اول ۔۔۔۔
انو منو حاضر ہے ایک اور انوکھے مہمان کے ساتھ۔۔۔۔

تحریر: انعم توصیف، کراچی
ادارہ: جگمگ موتی
عنوان: انوکھا انٹرویو # 2

السلام علیکم پیارے بچو! ایک بار پھر آپ کی خدمت میں حاضر ہے۔ آپ کی پیاری دوست ”اَنُو مَنُو“۔ ایک اور دل چسپ اور منفرد انٹرویو کے ساتھ۔ تو آٸیے شروع کرتے ہیں ہم آج کا انٹرویو۔۔۔ہمارے آج کے مہمان ہیں۔۔۔ یہ تو مہمان ہمیں خود ہی بتاٸیں گے کہ وہ کون ہیں؟

انو منو: السلام علیکم! آپ ہمارے ننھے قارٸین کو اپنے نام سے آگاہ کیجیے۔
مہمان: میرا نام ہے ”روزہ“ اور مجھے عربی زبان میں ”صوم“ کہتے ہیں۔

انو منو: کیا آپ بھی نماز کی طرح مسلمانوں پر فرض کیے گٸے ہیں؟
مہمان: جی بالکل! رمضان المبارک کے پورے مہینے میں ہر مسلمان پر مجھے رکھنا فرض ہے۔

انو منو: یعنی پورے انتیس یا تیس دن۔۔۔ آپ ہمیں یہ بتاٸیے کہ آپ کو رکھنے کا حکم کب ہوا؟
مہمان: مجھے رکھنے کا حکم اللہ پاک نے ہجرت کے دوسرے سال ماہ شعبان میں کیا۔

انو منو: آپ کے معنی اور آپ کو رکھنے کا طریقہ کیا ہے؟
مہمان: میرے یعنی صوم کے معنی ہے ”رکنا“۔ مجھے رکھنے کا طریقہ یہ ہے کہ سورج طلوع ہونے سے لے کر سورج غروب ہونے تک آپ لوگ کھانے پینے اور بری باتوں سے خود کو روکے رکھیں۔

انو منور: یہ تھوڑا مشکل نہیں ہے۔۔۔۔۔ میرا مطلب ہے کہ پورا دن۔۔۔؟
مہمان: مجھے اللہ کے لیے رکھا جاتا ہے۔ مجھے رکھنے کا انعام بھی اللہ ہی دے گا۔ دنیا میں ہمیں کوٸی انعام دیتا ہے تو وہ ہمیں کتنا اچھا لگتا ہے۔ پھر سوچیے اللہ پاک جو ربِ کاٸنات ہیں وہ انعام دیں گے تو کتنا زبردست ہوگا۔ یہ سوچ کر مجھے رکھا جاٸے گا تو بالکل بھی مشکل نہیں لگے گا۔

انو منو: آپ کے فرض ہونے کا ذکر قرآن پاک کی کس آیت میں ہے؟
مہمان: قرآن پاک کے پارہ 2 سورة البقرہ کی آیت نمبر 183 میں میرے فرض ہونے کا ذکر ہے۔
ارشاد باری تعالی ہے:
”اے ایمان والو! تم پہ روزے فرض کیے گٸے ہیں جس طرح تم سے پہلے لوگوں کیے گٸے تھے تاکہ تم پرہیز گار بن جاٶ۔“

انو منو: آپ اپنے بارے میں کوٸی حدیث مبارکہ سناٸیے۔
مہمان: میرے بارے میں اللہ کے پیارے نبیﷺ نے ارشاد فرمایا ہے۔
”روزہ آدمی کے لیے ڈھال ہے جب تک اس کو پھاڑ نہ ڈالے۔“
انو منو: آپ ڈھال ہیں اس کا مطلب؟
مہمان: جس طرح ڈھال انسان کو دشمن سے بچاتی ہے اس ہی طرح میں اللہ کے حکم سے مسلمانوں کو جہنم سے بچاٶں گا۔

انو منو: کیا آپ پھٹ بھی جاتے ہیں؟(جاری ہے)

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے