Home / پاکستان / تصاویر خود عنوان ہیں “*

تصاویر خود عنوان ہیں “*

*”
تحریر
عمیرحنفی
📕📕📕📕📕
حالیہ وباء کے دنوں میں جب ایس او پیز طے ہوچکی تو ایک نعرہ زبان زد عام ہوگیا کہ “علماء اور اہل ِ مدارس قانون کی پاسداری نہیں کرتے” مساجد کو کھولنے اور نمازوں کی ادائیگی پھر رمضان المبارک کی تراویح کے متعلق جتنے ضوابط طے پائے علماء پاسداری کرتے اور عمل کرواتے نظر آئے! لیکن ایک خاص طبقہ جو فقط علماء و دین کا ہی دشمن نہیں بلکہ عامی طبقہ کے ذہنوں کو بھی منتشر رکھنے کی خواہش رکھتا ہے کی جانب سے برابر” یہ نعرہ لگتا رہا” اور اس پروپیگنڈہ میں “ہمارا میڈیا” برابر کا شراکت دار رہا

آج جب وفاق المدارس العربیہ پاکستان کے زیر اہتمام سالانہ امتحانات طے ہوچکے! پھر بھی ایک طبقہ کو خاص تکلیف تھی کہ امتحان لینگے تو کرونا کیسیز میں اضافہ ہوگا اور بہت ساری بے بنیاد باتیں میرا ایک نقطہ نظر رہا ہے کہ علماء اور عام عوام طبقہ کا ساتھ چولی دامن والا ہے اس کوکبھی جدا نہیں کیا جاسکتا یہ لوگ جو انتشار پھیلا رہے ہوتے ہیں
وہ دونوں طبقات کا برا سوچ رہے ہوتے ہیں دونوں میں جدائی ڈال کر بڑے فخر سے “ملا اور مسٹر کی تفریق” کا نعرہ لگا رہے ہوتے ہیں درحقیقت کوئی تفریق ہوتی نہیں ہے

خیر! بات کہیں اور نکل گئی ان لوگوں سے گزارش ہے ان تصاویر کو دیکھیں یہ مدرسے کے طلباء علماء ہی ہیں یہ تصاویر خود ہی ایک عنوان ہیں

**

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے