Home / کالم / وہ منظر کتنا حسین ہوتا ہے نا

وہ منظر کتنا حسین ہوتا ہے نا

تحریر
فضالہ وصیف
📕📕📕📕📕
جب مشرق کی گود سے سورج اپنے سر پہ کرنوں کا تاج سجا کر طلوع ہوتا ہے.
جب برسات کی رُت میں آم کے باغوں میں کوئل کُوکتی ہے.
جب بادِ نسیم گلوں سے چھیڑ چھاڑ کرتے چمن سے گزرتی ہے.
جب گھمبیر کالی گھٹاؤں میں سفید براق کبوتر محوِ پرواز ہوتا ہے.
جب چودہویں کا چاند ستاروں کی جھرمٹ میں اپنی محفل سجاتا ہے.
جب گل و بلبل رُوبرُو گفتگو کرتے ہیں.
جب مست خرام ندی گنگناتی ہوئی کسی مرغزار سے گزرتی ہے.
جب گلاب کے مکھڑے پہ شبنم کے موتی جھلملاتے ہیں.
جب کسی صحرا میں رات کا سناٹا ستاروں کی کتھا سنتا ہے.
جب شوخ و شنگ ہواؤں سے سیب اور ناشپاتی کے درختوں کی ڈالیاں مستی میں رقص کرتی ہیں.
جب سرِ شام طوطوں کی ڈاریں اپنے بسیروں کی جانب سحر انگیز پرواز کرتی ہیں.
جب باصرہ نواز چمنستانوں میں تتلیاں دلربا رقص کرتی ہیں.
جب حُدی خوانوں کے نغموں سے مسحور ہوکر اونٹوں کا قافلہ مستانہ وار دوڑتا چلاجاتا ہے.
جب جھیل کے شفاف پانی میں عکسِ مہتاب دکھائی دیتا ہے.
جب برسات کی اندھیری، بھیگی راتوں میں جگنوؤں کا چراغاں ہوتا ہے.
جب نیلگوں آسماں سے لٹکتی ستاروں کی قندیلیں سیاہ راتوں پر نور کی کرنیں بکھیرتی ہیں.
جب فلک پر قوس قزح اپنے رنگوں کی جلوہ نمائی کرتی ہے.
جب بادلوں کی اُوٹ سے چاند آنکھ مچولی کھیلتا ہے.

کتنا حسین منظر ہوتا ہے نا؟؟؟

یہ سارے مناظر حسنِ محمّد صلی اللہ علیہ وسلم کی خیرات ہیں. اُنھی کے لئے یہ بزمِ ہستی سجائی گئی، کائنات کے گیسو آراستہ کئے گئے، دنیا کو زیب و زینت عطا کی گئی،
وہ کائنات کی روح ہیں،
حسن ہیں،
آبرو ہیں،

اللہ رب العزت نے انکو خاتم النبیین بنایا، ان کے سر پر تاجِ ختمِ نبوت سجایا، پورے عالم کی فضاؤں میں
” لَا نَبِیَّ بَعْدِیْ” کا پرچم لہرایا. وہ سب سے پہلے بابِ جنت کھول کر داخل ہونگے. اللہ تعالی انھیں مقامِ محمود پر فائز کرینگے. انھی کو سب سے پہلے اذنِ شفاعت ملے گا.
وہ شافعِ محشر، ساقئ کوثر ہونگے.

وہ سارے جنتیوں کے، سارے نبیوں کے نبی ہیں.
خدائے لم یزل کے اتنے چہیتے ہیں کہ رب ذوالجلال نے لازم قرار دیا کہ جو نام پڑھے درود پڑھے، جو نام سنے درود پڑھے.
رب نے نامِ احمد اپنے نام سے جوڑدیا. اپنی اذانوں، اپنی نمازوں میں شامل کردیا.جو بد نصیب اس نامِ مبارک کی توہین کرے اسکو قتل کرنے کا حکم دے دیا.

اب،،،

سورج تو اندھا ہوسکتا ہے،
چاند تو بے نور ہوسکتا ہے،
ستاروں کی قندیلیں بجھ سکتی ہیں،
اجرام فلکی ٹوٹ پھوٹ سکتے ہیں،
عنادل کی نغمہ ریزیاں اور تتلیوں کے رقص معطل ہوسکتے ہیں،
دریاؤں کی روانی کے رخ بدل سکتے ہیں،
لیکن،
محمد مصطفی احمد مجتبی صلی اللہ علیہ وسلم کے بعد کوئی نبی پیدا نہیں ہوسکتا.

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے