Home / کالم / نشہ

نشہ

“گاڑی کا نشہ اور گارڈ”
تحریر
عمیرحنفی

عمر رسیدہ بزرگ ، ضعیف جسم ، کہولت کا زمانہ ، سیفد داڑھی ، چہرے سے دکھ اور غربت عیاں تھی بڑی معصومیت سے عرض کیا بڑے میاں! اگر شفقت فرما کر گاڑی کو آگے لگا دیں تو نوازش ہوگی کیونکہ یہاں لوگوں نے اندر داخل ہونا ہوتا ہے اس نے پہلی بار نظر انداز کیا جب دوسری مرتبہ پھر اس نے نہایت شائستگی سے گزارش کی تو وہ صاحب سیخ پا اور آگ بگولہ ہوگئے کڑک دار لہجے میں انگلی فضاء میں بلند کرتے ہوئے اچھی خاصی انسانیت سے عاری چار گالیاں دی اور کہا “اگر دوبارہ گاڑی کے متعلق کچھ کہا تو خیر نہیں ہوگی مجھے جانتے نہیں آپ” گارڈ سہم سا گیا وہ صاحب شدت غصہ میں دروازے سے اندر داخل ہوئے کاونٹر پر موجود عملہ کے ایک فرد سے کہا “وہ بڈھا گاڑی آگے کرنے کا کہتا ہے” میں نے اس کو کہہ دیا ہے آپ بھی سمجھا لیں ورنہ ڈاکٹر صاحب کو کہہ کر فارغ کروا دونگا” گارڈ اس شخص کی جانب للچائی ہوئی نظروں سے دیکھ کر منت کرنے لگا حضور اس نوکری کو خطرے میں مت ڈالیں میرے چھوٹے چھوٹے بچے ہیں آئندہ یہ غلطی نہیں کرونگا اتنے میں ڈاکٹر صاحب کی جانب سے جناب کو بلا لائن بھیجنے کا حکم ہوا چند ہی لمحوں میں وہ دوائی لیکر گاڑی اسٹارٹ کر چکے تھے جبکہ عامی لوگ سات سو روپے فیس دیکر بھی ابھی بھی لائن میں بیٹھے انتظار کر رہے تھے

**

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے