Home / کالم / راز کی تلاش۔

راز کی تلاش۔

📕📕📕📕📕📕
تحریر:
دانش ریاض۔
___________________________
رمضان المبارک کا مہینہ مسلمانوں کے لئے حق تعالیٰ شانہٗ کا بہت ہی بڑا انعام ہے۔مگر یہ اس وقت ہے جب اس انعام کی قدر کی جائے۔رمضان المبارک کی ہر رات افطاری کے وقت سے صبح سحری تک خدا تعالی کی جانب سے یہ اعلان ہوتا ہے جسے انسان وجنات کے علاوہ ہر مخلوق سنتی ہے کہ “ہے کوئی مغفرت کا طلبگار کہ میں اس کی بخشش کروں, ہے کوئی حاجتمند کہ میں اس کی حاجت کو پورا کروں, ہے کوئی رزق کا طلبگار کار کہ میں اس کو عطا کروں……!!!”
رمضان المبارک کے دو عشرے گزر گئے لیکن ہم نے رمضان المبارک کے ان بابرکت لمحات سے کس قدر استفادہ کیا……!!! دن کے فارغ اوقات کو کس قدر عبادات میں صرف کیا……!!!
رمضان المبارک کا ایک عشرہ ابھی باقی ہے اور اگر ہم اس میں بھی اپنی بخشش نہ کروا سکے تو اس سے بڑھ کر ہماری محرومی کے لیے اور کیا بات ہوگی کہ حضرت جبرائیل علیہ السلام کی ہمارے خلاف بددعا ہو اور نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی اس پر آمین ہو؟؟؟۔
رمضان المبارک کے ان بقیہ لمحات میں ایک راز پوشیدہ ہے, جس کی تلاش کا ایمان والوں کو حکم دیا گیا ہے, وہ راز شبِ قدر ہے۔ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ “شبِ قدر کو رمضان المبارک کے اخیر عشرہ کی طاق راتوں میں تلاش کرو”( البخاری)۔ یہ رات بہت ہی برکت اور خیر والی رات ہے۔قرآنِ کریم میں اس کو ہزار مہینوں سے افضل بتایا گیا ہے۔ گویا جس نے یہ ایک رات عبادت میں گزار دی اس نے تراسی برس چار ماہ سے زائد زمانہ کو عبادت میں گزار دیا۔
یہ رات امتِ محمدیہ کیلئے خصوصی انعام ہے۔ پہلی امتوں میں سے کسی کو یہ عطا نہیں کی گئی۔ شبِ قدر سے متعلق کوئی تعیین حدیثِ مبارکہ میں مذکور نہیں کہ آیا وہ ستائیسویں رات ہے یا پچیسویں بلکہ رمضان المبارک کی طاق راتوں میں اس کو تلاش کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔ اس لیے چاہیے کہ تمام طاق راتوں میں ہی کسی قدر وقت عبادت میں صرف کیا جائے اور خصوصیت سے ایک دعا جس کا اس مکمل عشرے میں ہی اہتمام کرنا چاہیے وہ دعا یہ ہے “اَلّٰلہُمَّ اِنَّکَ عَفُوُّ تُحِبُّ العَفوَ فَاعفُ عَنَّا”۔( ترجمہ: اے اللہ! بے شک آپ معاف فرمانے والے ہیں اور معاف کرنے والوں کو پسند کرتے ہیں, پس ہمیں بھی معاف فرما دیجئے)۔
خدا تعالی سے دعا ہے کہ ہمیں رمضان المبارک کے ان بابرکت لمحات کی قدردانی نصیب فرمائے اور شبِ قدر کی فضیلت کو حاصل کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔تاکہ ہم بھی اس حدیثِ مبارکہ کا مصداق بن سکیں جس میں نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ “جو شخص شبِ قدر میں ایمان کے ساتھ اور ثواب کی نیت سے (عبادت کے لئے) کھڑا ہو اس کے پچھلے تمام گناہ معاف کردیے جاتے ہیں”(البخاری)۔اللہم اجعلنا منہم۔
اپنی رائے ضرور دیں.

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے