Home / کالم / جاہل اور کم پڑھے

جاہل اور کم پڑھے

تحریر
اسحاق مزاری
💐💐💐💐💐
فیسبک پر پہلے پہل بہت اچھی تحاریر اور ویڈیوز ملا کرتی تھی لیکن جب فیسبک کا استعمال جاہل اور کم پڑھے لکھے طبقے نے شروع کردیا تو فیسبک پر صرف پاگلوں والے پوسٹ ملتے ہیں.مثلاً
1 ٹائپ کریں مکھی اُڑ جائے گے یا ٹرک سیدھا ہو جائے گا.
اور دیگر اسطرح کی بے ہودہ پوسٹیں ملنے لگیں.
بلکل اسی طرح صحافت کے شعبے میں بھی معیاری خبریں ملتی تھی لیکن جب ہر پرائمری اور کچی پاس لوگ صحافت میں آنے لگے معیاری اور اچھی خبریں ختم ہوکر خوشآمدی خبریں پڑھنے کو ملنے لگیں.
وفاق اور صوبوں کو مل بیٹھ کر صحافت کے شعبے کو سنجیدہ لینا چاہیے اور پیمرا کیساتھ مل بیٹھ کر کچھ معیار مقرر کرنے چاہیں.
کم از کم اخبار مالکان کا ہر اس شخص کو اپنے اخبار میں شامل کرنا چاہیے جس نے بی اے پاس ہونے کیساتھ ساتھ 6 ماہ صحافت کا کورس کیا ہوا ہو.
مجھے معلوم ہے اسکو کوئی آگے شیئر نہیں کرے گا کیونکہ ہمارے اردگرد پرائمری اور کچی پاس صحافی ہیں کون چاہے گا کہ انکے پریس کارڈ ضبط ہوں.

#

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

One comment

  1. Avatar

    جی بلکل درست فرمایا آج کل صرف ایسے ہی لوگوں کو نوکری دی جاتی ہے جس کی سفارش ہو جتنی اچھی سفارش ہو گی نوکری بھی اتنی اچھی ہو گی سفارش والے کی نہ تعلیم ضروری ہوتی ہے اور نہ ہی کام کے تجربے کی ۔ایسے میں پھر کوئی بھی شعبہ ہو جب نا اہل اور جاہل لوگ کام کریں گے تو ایسا ہی ہو گا جیسے ہمارے ملک کے سانئس دان ڈاکٹر عبد القدیر صاحب کے ساتھ ہو رہا ہے کوئی قدر نہیں ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے