Home / پاکستان / غلط فہمی کہاں پر؟

غلط فہمی کہاں پر؟

علما کا قصور کیا؟*

تحریر:
*حافظ عمیرحنفی*

گزرتے وقت کے ساتھ نوجوان نسل کی ذہن سازی بھی بہت گھناؤنے طریقے سے کی جارہی ہے ہمیں فقط یہی بات سکھائی جارہی ہے علمائے کرام فرقہ واریت اور لسانی تعصب سکھاتے اور اپنے اپنے مسالک کی محبت دلوں میں ڈالتے ہیں جو یقیناً غلط ہے ہمیں کہا جاتا ہے یہ سب علماء غلط ہیں تو پھر ٹھیک کون ہے؟ ہر بندہ اپنی سی سوچ کا مالک ہے وہ وہی سوچے گا جو پرنٹ میڈیا الیکڑانک میڈیا یا سوشل میڈیا اس کو بتائے گا دکھائے گا تمام اختلافات کے پیچھے انا ہوتی ہے اور انا کہاں سے پیدا ہوتی ہے! جب ایسی ذہن سازی ہو جہاں علمائے کرام کو دشمن و ملک کا باغی تصور کیا جانے لگا جہاں وہ بندہ بھی مفتی بن کر علماء پر طنز و تشنیع کرے جو تہذیب انسانی سے ناواقف اور طرز بود وباش سے عاری ہو میں پہلے بھی عرض کیا کرتا ہوں جنکو دین کے بنیادی ارکان کے نام تک یاد نہ ہوں اور اعتراضات علماء پر کریں یہ شایان شان نہیں اگر علم التفسیر علم الحدیث علم الفقہ علم الکلام علم الادب سے ناشناس ہیں تو آپ کو حق قطعاً نہیں ہے کہ علما پر اعتراض کریں …………قصہ مختصر آمدم برسرِ مطلب

تمام علمائے کرام کا متفقہ اجلاس ہوا جس میں پانچ وقت کی نمازوں اور تراویح وغیرہ سے لاک ڈاؤن ختم کرنے کی تجاویز دی گئیں اب دانشور کافی دنوں سے خالی ہاتھ تھے اس بات کو بتنگڑ بنا دیا آیا یہ درست ہے یا غلط؟ اب بات کو سمجھیں!
1: انہوں نے حکومت سے بغاوت کا اعلان نہیں کیا
2:انہوں نے احتیاطی تدابیر کی مخالفت نہیں کی
3:انہوں نے عمل کرانے پر زبردستی یا دھمکیاں نہیں دی
4:انہوں نے حکومت وقت کو کافر قرار نہیں دیا کہ انکی کوئی بات نہ مانی جائے.
5:انہوں نے احتجاج یا دھرنا نہیں دیا.

👈👈انہوں نے فقط تجاویز دی ہیں #لفظ تجاویز یا #مطالبات بغاوت ہے! تو روزانہ جو مشیر یا جو بھی وزیر اعظم صاحب کو مشورے دیتے ہیں وہ بغاوت ہے؟ یا دیگر لوگ مطالبات کے لیے احتجاج کرتے ہیں وہ بغاوت ہے؟ خدارا کچھ سوچا کریں ویسے بھی علما کو امور شریعت میں امام مانتے ہیں اور بدہضمی اس حدرجہ تک…! میرے خیال میں اہل فہم کے سمجھنے کے لیے یہاں تک بات کافی ہے

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے