Home / اسلام / تکمیل نعمت کا اعلان*

تکمیل نعمت کا اعلان*

*درس قرآن نمبر 109*

*تکمیل نعمت کا اعلان*

مدرس: محمد عثمان شجاع آبادی

وَمِنْ حَيْثُ خَرَجْتَ فَوَلِّ وَجْهَكَ شَطْرَ الْمَسْجِدِ الْحَرَامِ ۖ وَاِنَّهٝ لَلْحَقُّ مِنْ رَّبِّكَ ۗ وَمَا اللّـٰهُ بِغَافِلٍ عَمَّا تَعْمَلُوْنَ (149) ↖
اور جہاں سے آپ نکلیں تو اپنا منہ مسجد حرام کی طرف کیا کریں، اور آپ کے رب کی طرف سے یہی حق بھی ہے، اور اللہ تمہارے کام سے غافل نہیں۔

وَمِنْ حَيْثُ خَرَجْتَ فَوَلِّ وَجْهَكَ شَطْرَ الْمَسْجِدِ الْحَرَامِ ۚ وَحَيْثُ مَا كُنْتُـمْ فَوَلُّوْا وُجُوْهَكُمْ شَطْرَهٝ لِئَلَّا يَكُـوْنَ لِلنَّاسِ عَلَيْكُمْ حُجَّةٌ ۖ اِلَّا الَّـذِيْنَ ظَلَمُوْا مِنْـهُـمْ فَلَا تَخْشَوْهُـمْ وَاخْشَوْنِىْ ۖوَلِاُتِمَّ نِعْمَتِىْ عَلَيْكُمْ وَلَعَلَّكُمْ تَهْتَدُوْنَ (150) ↖
اور آپ جہاں کہیں سے نکلیں تو اپنا منہ مسجد حرام کی طرف کیا کریں، اور تم بھی جہاں کہیں ہو تو اپنا منہ اس کی طرف کیا کرو تاکہ لوگوں کو تم پر کوئی الزام نہ رہے، مگر ان میں سے جو ہٹ دھرم ہیں تم بھی ان سے نہ ڈرو اور ہم سے ڈرتے رہا کرو، اور تاکہ میں اپنی نعمت تم پر پوری کروں اور تاکہ تم راہ پاؤ۔

*ربط۔*

پہلے تحویل قبلہ کا بیان تھا اب اس حکم کو ایک نعمت کہا گیا ہے۔

*تفسیر*

اس اورپہلے کی چند آیات میں تحویل قبلہ کا تکرار کے ساتھ لانے کی حکمت یہ ہے کہ پہلے فرمایا گیا تھا کہ اس تبدیلی کی وجہ رسول اللہ ﷺ کی چاہت تھی۔پھر اس وجہ سے ذکر فرمایا کہ ہر امت کا ایک قبلہ ہوتا ہے اور اس امت کا قبلہ بیت اللہ ہے۔اب اس آیت میں اس لیے ذکر فرمایا کہ تمام مخالفین کے لیے حجت قاٸم ہوجاۓ۔مشرکین یہ نہ کہہ سکیں کہ مسلمانوں کا دعوی تو ملت ابراہیمی کی اقتدا کا ہے جب کہ قبلہ ان کا کوٸ اور ہے اسی طرح اہل کتاب یہ نہ کہیں تورات و انجیل میں تو اس رسول کا قبلہ بیت اللہ بتایا گیا ہے جب کہ اس نے تو بیت المقدس کی طرف رخ کیا ہے۔
اس حکم کو بار بار لانے کا ایک مقصد یہ بھی ہے کہ اب یہ حکم دوبارہ نہیں بدلہ جاۓ گا۔تاکید کی جارہی ہے کہ یہی قبلہ ہے۔

*اتمام نعت سے مراد*

آیت مبارکہ میں نعمت سے کیا مراد ہے اس بارے میں مفسرین اقوال مندرجہ ذیل ہیں۔
1۔ اس سے مراد تحویل قبلہ اور بعثت رسول ﷺ ہے۔
2۔اس امت کو امت وسط قرار دے کر جو اس کی امامت کا اعلان کیا گیا ہے اس نعمت سے مراد یہی امامت ہے۔
یہ منصب امت محمدیہ کو دیا گیا ہے تو اللہ کے فضل و احسان کی تکمیل ہے۔اسی احسان کا تقاضا ہے کہ تم اللہ کی پیروی کرو تاکہ تم ہدایت یافتہ قرار دیے جاٶ۔
جس اللہ نے یہ منصب عطا فرمایا اسی سے ڈرتے رہنا چاہیے اور شکر ادا کرنا چاہیے ناشکری نہیں کرنی چاہیے کہیں یہ نعمت چھن نا جاۓ۔
آج ہمیں اس نعمت کی قدر کرنی چاہیے۔اپنا کھویا مقام اسلام پر عمل کرتے ہوۓ حاصل کرنا چاہیے۔

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے