Home / کالم / تفہیم مغرب فورم*

تفہیم مغرب فورم*

📖 *مقصد، سمت اور منہج*
✒️ *نیاز سواتی*
ـــــــــــــــــــــــــــــــــ

*مقصد* اور *ذریعہ سفر* دونوں ہی *نیک* ہوں اور *سمت* کا تعین بھی درست ہو تو *سفر ہی مدعائے سفر* ہے، *ناکامی* یہاں *جنس نایاب* ہے تو ہر *قدم* خود ہی *منزل* قرار پاتا ہے، *وقت، جان و مال* کے زیاں اور *منزل* کے کھو جانے کا ڈر بالکل بھی نہیں، اس کی ایک مثال *سفر حج* ہے، اس سفر کا مقصد رضائے الٰہی کا حصول ہے تو سمت حرم پاک ہے، اگر ذریعہ سفر بھی پاک و حلال ہو تو ناکامی کا کیا ڈر؟ اس *مبارک سفر* کے کسی مرحلے پر اگر موت بھی آجائے تو بازی مات نہیں، اگر یہ سفر طویل بھی ہو تو گھاٹے کا سودا نہیں، ہوائی سفر سے قبل دنیا کے کونے کونے سے بندگان توحید پیدل، جانوروں پر اور بحری راستوں سے طویل سفر کر کے حرمین شریفین پہنچتے رہے ہیں، طویل سفر اور وقت کبھی ان کے پاؤں کی زنجیر نہیں بنے، یہی حال *دعوت، جہاد، اقامت دین اور دیگر دینی فرائض* کا بھی ہے، یہاں *مقصد اور سمت* کی درستی ہی کافی نہیں، *طریق کار* کا درست ہونا بھی ضروری ہے *کوئی نیک مقصد غلط طریقہ کار سے حاصل نہیں کیا جاسکتا اور نہ کوئی مختصر راستہ مفید ہوسکتا ہے* ورنہ غریبوں کی اعانت کا مختصر ترین طریقہ یہ بھی ہوسکتا ہے کہ ایک ایسا گروہ تشکیل دے دیا جائے جو امیروں سے دولت لوٹ کر غریبوں میں تقسیم کرتا رہے، رابن ہڈ کا یہ طریقہ وقت بھی کم لیتا ہے اور بہ ظاہر منطقی بھی نظر آتا ہے کہ امیروں کی دولت کا رخ فوری طور پر غریبوں کی طرف ہوجاتا ہے، اس کے بر عکس ہمارے پاس *زکوٰۃ* کا طویل طریقہ ہے جو *مقصد، سمت، طریق کار اور انجام* ہر لحاظ سے بہترین ہے، الحمدللہ آج تک امت میں *زکوٰۃ کے حصول اور تقسیم کے طریق کار* میں کوئی اختلاف پیدا نہیں ہوا، اصل بات یہ ہے کہ *مقاصد شریعہ کے حصول کا راستہ بھی شریعہ کے ماتحت ہی ہونا چاہئے کیونکہ اپنے پسندیدہ راستے کی حکمتوں کو رب خود ہی جانتا ہے* اسلام ایک *جامع دین* ہے بلکہ یہ کہا جائے کہ *مکمل نظام حیات صرف اسلام ہی کے پاس ہے تو بے جا نہ ہوگا* اسلام محض *اخلاقی ہدایت کا منبع* نہیں بلکہ *فرد اور اجتماعیت کے ہر مسئلے کا حل* ہے، وہ سیکولر ازم کی طرح *دین کو فرد کا ذاتی مسئلہ* قرار نہیں دیتا بلکہ *فرد سے ریاست کی اعلیٰ ترین سطح تک ہر معاشرتی ادارے کو اپنی مبارک آغوش میں لے لیتا ہے* اپنی اس *فطرت* کی وجہ سے *اسلامی معاشرے میں اقتدار سیاست دانوں کا کھیل نہیں بلکہ خلافت علی منہاج النبوۃ کا حصہ ہوتا ہے* مسلم معاشرے میں اس *خلافت کے قیام کی جدوجہد اسی طرح محترم ہے جس طرح حج، دعوت اور جہاد محترم ہیں* اگر خلافت کے *احیاء کی جدوجہد* اس قدر *مقدس* ہے تو اس کا طریق کار بھی *مقدس* ہی ہونا چاہئے، کوئی *غیر اسلامی مختصر راستہ، زمانے کا چلن، نبوی منہج سے متصادم طریقہ یہاں دلیل نہیں بن سکتا بلکہ دین دنیا کی بربادی کا سبب بن سکتا ہے* مفہومِ حدیث کے مطابق اسلام شروع میں اجنبی تھا اور آخر میں پھر اجنبی ہوجائے گا، نعوذباللہ *اجنبی ہونے کا مطلب یہ نہیں ہوگا کہ اسلام یا اس کا کوئی طریق کار غلط ہوگا* بلکہ اس کا مطلب یہ ہے کہ *اسلام ہی اپنے مقصد اور طریقے کے لحاظ سے درست ہوگا مگر دنیا میں اس کے بر عکس کوئی اور نظام زندگی رواں دواں ہوگا جس کے مضر اثرات کے باوجود دنیا اسی کے مطابق چل رہی ہوگی یعنی ہوا غبار کے ساتھ ہوگی* فی زمانہ دنیا میں *سرمایہ دارانہ نظام، جمہوریت اور قومی ریاست نے دنیا کو اپنے منحوس پنجوں کی گرفت میں لے رکھا ہے مگر اس کا یہ مطلب نہیں یہ کفر کا یہ نظام درست اور ہمیشہ کے لئے انسانیت کا مقدر ہے* آج بھی رب کی تشکیل کردہ زمین اپنے *فطری نظام* کی طرف ضرور پلٹے گی، *یہ تبدیلی اپنے نبوی مقصد کی طرح نبوی منہج سے ہی ہوگی سرمائے، قومی ریاست اور جمہوریت کے سراب سے نہیں* ان شاءاللہ
ــــــــــــــــــــــــــــــ
*تفہیم مغرب فورم* سے مستفید ہونے کےلئے درج ذیل لنکس میں سے ایک پر کلک کیجئے!


https://chat.whatsapp.com/BZnOZTOC8rGFtcPitq7d67

https://chat.whatsapp.com/4hNMVvoqkFb2DZStQXigB7

https://chat.whatsapp.com/GugoESJCylX1ZnsprNnKlU

https://chat.whatsapp.com/Dxr4XY4Cco5AxVULPVYr0T

https://chat.whatsapp.com/K9K0fNFHevH64vKbmNdK0p

https://chat.whatsapp.com/G2Al2PQ8gFIKyQ80TNICQH

https://chat.whatsapp.com/Ke1n53Yr8Jy3P7IHEaBzIz

About Babar

Babar
I am Babar Alyas and I’m passionate about urdu news and articles with over 4 years in the industry starting as a writer working my way up into senior positions. I am the driving force behind The Qalamdan with a vision to broaden my city’s readership throughout 2019. I am an editor and reporter of this website. Address: Chak 111/7R , Kamalia Road, Chichawatni, Distt. Sahiwal, Punjab, Pakistan Ph: +923016913244 Email: babarcci@gmail.com https://web.facebook.com/qalamdan.net https://www.twitter.com/qalamdanurdu

One comment

  1. Avatar

    Love it very much. I have 3 more Cartier . Very classy

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے